Subh Bakhir Ghazal


پورب کا دروازہ کھلا ٹھنڈی ٹھنڈی چلی ہوا
جاگو جاگو صبح ہوئی
پھولوں کا منہ شبنم سے دھلا، ہنس کر یہ پھولوں نے کہا
جاگو جاگو صبح ہوئی
گلشن گلشن مہک اٹھا، ہر اک پرندہ چہک اٹھا، ذرّہ ذرّہ مہک اٹھا
جاگو جاگو صبح ہوئی
بڑوں نے کیا یہ خوب کہا صبح سویرے جو بھی اٹھا دن بھر وہ ہنستا ہی رہا
جاگو جاگو صبح ہوئی
پورب کا دروازہ کھلا….


1 تبصرہ

  1. Muhammad Rashid said,

    فروری 19, 2013 at 2:40 شام

    Date: Tue, 19 Feb 2013 12:17:49 +0000
    To: rashid_431@hotmail.com


Leave a Reply / Ap ka pegham

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: